167

رشوت خوری کےخلاف زیرو ٹالیرنس کو یقینی بنانے کی ہدایت

چیف سیکرٹری ڈاکٹر ارون کمار کی زیرصدارت جموں و کشمیر سپورٹس کونسل کی میٹنگ منعقد
قوم مخالف سرگرمیوں میں ملوث ملازموں کےخلاف سخت کارروائی عمل میں لائی جائے گی
سری نگر:۳۱،جولائی:جے کے این ایس : سرکاری دفاتر میں رشوت خوری کے قلع قمع کو یقینی بنانے کےلئے یونین ٹریٹری انتظامیہ نے جموں و کشمیر سپورٹس کونسل کو ہدایت دی ہے کہ وہ ذیلی یونٹوں میں رشوت خوری کےخلاف زیرو ٹالیرنس کو اجاگر کرنے کےلئے قائم بورڈوں کی نمائش کریں۔اس دوران ایک جاری سرکیولرمیں کہا گیا کہ قوم مخالف سرگرمیوں میں ملوث ملازموں کےخلاف سخت کارروائی عمل میں لائی جائے گی۔جے کے این ایس کے مطابق جموں و کشمیر سپورٹس کونسل کی سکریٹری نزہت گل کی طرف سے جاری ایک سرکیولر میں کہا گیا ہے کہ جموں و کشمیر کے چیف سکریٹری ڈاکٹر ارون کمار کی سربراہی میں منعقدہ ایک میٹنگ میں کونسل کے کام کاج میں شفافیت لانے کےلئے کئی فیصلے لئے گئے جن پر سختی سے عمل کیا جائے گا۔انہوں نے سرکیولر میں کہاکہ محکمے میں مبینہ رشوت خوری کی شکایات کے پیش نظر حکومت نے کونسل کو ہدایات دی ہیں کہ وہ وہ ذیلی یونٹوں میں رشوت خوری کے خلاف زیرو ٹالیرنس کو اجاگر کرنے کےلئے اور شکایت بکس نصب کرنے کےلئے قائم بورڈوں کی نمائش کریں۔سرکیولر میں کہا گیا کہ قوم مخالف سرگرمیوں میں ملوث ملازموں کےخلاف سخت کارروائی عمل میں لائی جائے گی۔دریں اثناءکونسل کے ایک اعلیٰ عہدیدار نے بتایا کہ میٹنگ میں کونسل اور اس کے ملازمین کی فلاح و بہبودی کےلئے بھی کئی اہم فیصلے لئے گئے۔انہوں نے کہا کہ میٹنگ میں کونسل کے اثاثوں کے بہتر اور موثر استعمال، حصولیابیوں کی مقامی میڈیا میں تشہیر، نئے ملازمین کی ویری فیکیشن میں سرعت لانے وغیرہ جیسے اہم فیصلے لئے گئے۔موصوف نے کہا کہ میٹنگ میں جن دیگر فیصلوں پر عمل پیرا ہونے پر زور دیا گیا ان میں روزانہ بنیادوں پر ملازموں کی حاضری کی رپورٹ تیار کرنا،چیف ویجی لینس کمیشن کی ہدایات کو عمل میں لانا، ذیلی یونٹوں کا باقاعدگی سے معائینہ کرنا، کونسل کی عمارتوں پر قومی جھنڈا لہرانا وغیرہ خاص طور پر قابل ذکر ہے۔سرکیولر میں کہا گیا کہ جس ملازم یا کھلاڑی نے کورونا ویکسین نہیں لگوائی ہو، اس کو دفتر میں داخل ہونے کی اجازت نہیں ہوگی نیز ایسے کھلاڑیوں کو کھیلنے کی بھی اجازت نہیں ہوگی۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں