146

کووِڈ ۔19 کی تیسری لہر کے خطرناک کے اَثرات سے بچنے کیلئے سی اے بی اہم ہے ۔ ضلع ترقیاتی کمشنر بڈگام

کہا ضلع میں کووِڈ ۔19 مثبت مریضوں کی صحتیابی کی شرح 99.8 فیصد تک پہنچ گئی ہے
بڈگام/13؍ جولائی :ضلع ترقیاتی کمشنر بڈگام شہباز احمد مرزا نے کہا کہ ضلع میں کووِڈ۔19 وَبائی اَمراض کی تیسری لہر کے بڑھتے ہوئے خطرے سے بچنے کے لئے کووِڈ مناسب طرزِ عمل ( سی اے بی ) پر سختی سے عمل پیرا ہونا ضروری ہے ۔ اِن باتوں کا اِظہار ضلع ترقیاتی کمشنر بڈگام نے آج میڈیا اَفراد کو ضلع میںموجودہ کووِڈ۔19 مجموعی صورتحال کے بارے میں بریفنگ دینے کے دوران کیا۔ضلع ترقیاتی کمشنر بڈگام نے تفصیلات دیتے ہوئے کہا کہ ضلع بڈگام نے 45 برس سے زیادہ عمر کے گروپوں کو ویکسی نیشن کا ہدف صد فیصد کامیابی کے ساتھ حاصل کیا ہے ۔ اُنہوں نے 18 برس عمر سے 44 برس عمر کے زمرے کے لوگوں میں ویکسی نیشن کی صورتحال کا حوالہ دیتے ہوئے کہا کہ ضلعی اِنتظامیہ کو اُمید ہے کہ وہ ایک ماہ کے اندر اندر 50فیصد ہدف حاصل کرے گی۔اُنہوں نے کہا کہ ٹیکہ کاری مہم میں تیزی لانے کی کوششیں جارہی ہیں۔اُنہوں نے ضلع میں مثبت معاملات کی تعداد کے بارے میں جانکاری دیتے ہوئے کہا کہ اِس وقت ضلع میں صرف 132 مثبت معاملات ہیں اور اس کی شرح 0.3فیصد سے کم ہے ۔ڈی سی نے کہا کہ کووِڈ ۔19 وَبائی مرض کے پھیلائو سے روکنے کے لئے ٹیکہ کاری مہمات میں بڑے پیمانے پر شرکت کے لئے زور دیا جارہاہے ۔اُنہوں نے کہا کہ عید الاضحی کی آمد آمد ہے اِس لئے بازاروں میں خدمات فراہم کرنے والوں کے لئے ٹیکہ کاری مہم تیز رفتاری سے چلائی جائے گی۔ضلع ترقیاتی کمشنر نے لوگوں سے ایک بار پھر اپیل کی وہ کووِڈ مناسب طرز عمل ( سی اے بی ) ، تمام کووِڈ ۔19 ایس او پیز کی پیروی کریں بالخصوص گنجان جگہوں پر غیر ضروری اِجتماعات سے اِجتناب کریں۔دریں اثنا قارئین یہ خبریں سرکاری فیس بک پیج اور ڈسٹرکٹ اِنفارمیشن سینٹر بڈگام کے ٹویٹر ہینڈل facebook.com/dicbudgam; twitter.com/dicbudgamپر بھی پڑھ کرسکتے ہیں۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں